وزارت مذہبی امور حج سبسڈی کی مد میں ڈیڑھ لاکھ روپے فی حاجی کے حساب سے رقم کی ادائیگی 17 اگست سے 31 اگست تک مکمل کرے گی، مفتی عبدالشکور

وزار ت مذہبی امور حج سبسڈی کی مد میں ڈیڑھ لاکھ روپے فی حاجی کے حساب سے رقم کی ادائیگی 17 اگست سے 31 اگست تک مکمل کرے گی ، 5 ارب 10 کروڑ 73 لاکھ 50 ہزار روپے کی رقم سرکاری سکیم کے تمام 34049 حاجیوں کو ادا کی جائے گی ۔

حج آپریشن 2022 کی تکمیل کے بعد پیر کو وزارت مذہبی امور میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے وفاقی وزیر مذہبی امور مفتی عبدالشکور نے کہا کہ حج 2022 بہترین طریقے سے اختتام پذیر ہوگیا ہے جس کے لئے ہم اللہ تعالی کے شکرگزار ہیں، وزارت مذہبی امور نے کم ترین وقت میں تمام انتظامات مکمل کر کے حج انتظامات کو ممکن بنایا ہے ۔انہوں نے کہا کہ روپے کی قدر میں کمی کی وجہ سے سعودی حکومت اور پاکستان کی معیشت کو بھی مشکلات کا سامنا ہے ،لازمی حج اخراجات سات ہزار ریال تک پہنچ گئے ہیں پہلے ہم نے حج پیکج کا تخمینہ نو لاکھ انچاس ہزار لگایا تھا مگر پھر ہم نے اس پر نظر ثانی کی۔

انہوں نے کہا کہ اسلام آباد ائیرپورٹ سے 15 ہزار سے زائد سرکاری عازمین حج کو روٹ ٹو مکہ کی سہولیات فراہم کی گئیں ۔تمام حاجیوں کو ٹرانسپورٹ کی فراہمی سمیت حرمین کے قریب رہائش گاہیں فراہم کی گئیں ۔ اسی طرح منی میں جمرات کے قریب پاکستانیوں کے لئے خیمےحاصل کئے گئے اور میدان عرفات میں جبل رحمت اور مسجد نمرہ کے قریب پاکستانی حاجیوں کو خیمے فراہم کئے گئے۔ انہوں نے کہا کہ واپسی کے لیے تمام عازمین حج کو سٹی چیک ان کی سہولت فراہم کی گئی اور حاجیوں کو ان کی رہائش گاہ پر سامان وصول کرکے بورڈنگ پاس جاری کیے گئے انہوں نے کہا کہ پہلے پاکستان کا کوٹہ 81132 تھا مگر سعودی حکومت نے بنک متاثرین کے لیے دو ہزار کا اضافی کوٹہ دیا ۔

سرکاری سکیم کے تحت حج کے لئے انتظامات کو وزیراعظم نے وفاقی کابینہ کے اجلاس میں سراہا ہے ۔انہوں نے کہا کہ ہم نے حاجیوں کو سبسڈی دینے کا جو وعدہ کیا تھا ابتدائی طور پر ایک لاکھ پچاس ہزار کی رقم 32106 حاجیوں کودینے کا وعدہ کیا ھا مگر ہم نے بعد میں دو ہزار اضافی کوٹہ والے بھی اس میں شامل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

وزارت مذہبی امور نے فیصلہ کیا ہے کہ سرکاری سکیم کے تمام حاجیوں کو ایک لاکھ پچاس ہزار کی رقم کی ادائیگی کا عمل 17 اگست سے 31 اگست تک مکمل کر لیا جائے گا. حجاج اپنی اصل شناختی دستاویزات دکھا کر یہ یہ رقوم اپنے متعلقہ بنکوں سے لے سکتے ہیں اور جن حاجیوں کے اکاؤنٹس ہیں ان کو ان کی رقم ان کے اکاؤنٹ میں منتقل کر دی جائے گی ۔ایک سوال کے جواب میں مفتی عبدالشکور نے کہا کہ سیکرٹری مذہبی امور وزارت کا انتظامی سربراہ ہونے کے ناطے سے بہتری کے لئے کارروائی کرنے کا مجاز ہے سیکرٹری مذہبی امور نے کہا کہ ہمارا حج پیکج پرائیویٹ سکیم کے مقابلے میں سستااور بہتر تھا۔

ایک سوال کے جواب میں سیکرٹری مذہبی امور نے کہا رابعہ نام کی میری کوئی بہن نہیں ہے میری ایک بہن ہے جس نام ہما ہے وہ کینسر کی مریضہ ہے اس نے حج نہیں کیا ۔ اس حوالے سے خبروں میں کوئی صداقت نہیں ۔ وفاقی زیر مذہبی امور نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ حج معاونین کے حواکے سے آئندہ سال آئندہ سال کے لئےبہترین نظام بنانے کے لیے تمام فریقین کی مشاورت سے فیصلہ کریں گے اور حج انتظامات کو آئندہ بھی بہتر سے بہتر بنانے کی کوشش کریں گے ایک اور سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ دو ہزار کے اضافی کوٹہ کی اگر غیر شفاف تقسیم کی اطلاع درست ثابت ہوئی تو تحقیقات کے بعد اس کے مرتکب افراد کو کیفر کردار تک پہنچائیں گے انہوں نے کہا کہ کہ ہم کمزور لوگ ہیں مگر اللہ نے ہماری مدد کی ہے اور حج آپریشن کامیابی سے ہمکنار ہوا ہے۔

یہ خبر پڑھیئے

اوپیک پر کمزور ہوتی امریکی گرفت

اوپیک پر کمزور ہوتی امریکی گرفت

Show Buttons
Hide Buttons