چین کی فارن ایکسچینج مارکیٹ مستحکم انداز میں چل رہی ہے، اسٹیٹ ایڈمنسٹریشن آف فارن ایکسچینج

چین کی فارن ایکسچینج مارکیٹ مستحکم انداز میں چل رہی ہے، اسٹیٹ ایڈمنسٹریشن آف فارن ایکسچینج

22 جولائی کی صبح، اسٹیٹ ایڈمنسٹریشن آف فارن ایکسچینج کی ترجمان وانگ چھون اینگ نے ایک پریس کانفرنس میں 2022 کی پہلی ششماہی میں چین کے زرمبادلہ کی وصولیوں اور ادائیگیوں کا ڈیٹا متعارف کرایا۔

انہوں نے بتایا کہ اس سال کے آغاز سے، زیادہ پیچیدہ اور شدید بیرونی دباؤ اور چیلنجوں کا سامنا کرتے ہوئے، چین کی زرمبادلہ کی مارکیٹ نے اپنی لچک کو مضبوط کیا ہے۔

سب سے پہلے، چینی کرنسی آر ایم بی کے زر مبادلہ کی شرح زیادہ لچکدار ہو گئی ہے اور عالمی سطح پر مستحکم کارکردگی دکھا رہی ہے۔

دوم، چین کا سرحد پار سرمائے کا بہاؤ عام طور پر مستحکم ہے، جو نسبتاً متوازن ترقی کے رجحان کو ظاہر کرتا ہے۔

تیسرا، چین کے سرحد پار سرمائے کے بہاؤ کے سلسلے میں کرنٹ اکاؤنٹ سرپلس اور طویل مدتی سرمائے کی آمد اب بھی بنیادی رجحان ہیں۔

یہ کہا جا سکتا ہے کہ چین میں وباء کی روک تھام اور کنٹرول اور اقتصادی اور سماجی ترقی کو مربوط کرنے میں زیادہ موثر ہے، اچھی اقتصادی لچک اور کافی صلاحیت کے ساتھ، چین  کی غیر ملکی زرمبادلہ کی منڈی کے ہموار آپریشن کے لیے ایک مضبوط بنیاد میسر ہے۔ اس لئے چین بیرونی ماحول میں ہونے والی تبدیلیوں کا مقابلہ کرنے کی بھی زیادہ صلاحیت رکھتا ہے۔

یہ خبر پڑھیئے

ملک کے بیشتر حصوں میں گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان ہے، محکمہ موسمیات

محکمہ موسمیات کے مطابق آئندہ 24 گھنٹوں کے دوران خیبرپختونخوا، بالائی پنجاب، بلوچستان، سندھ، کشمیر …

Show Buttons
Hide Buttons