تازہ ترین

چین پاک دوستی باہمی اعتماد اور حمایت پر مبنی ہے، چینی ناظم الاامور

پاکستان میں تعینات چینی ناظم الاامور پھانگ چھون شوئے نے کہا ہے کہ چین پاک دوستی باہمی اعتماد اور حمایت پر مبنی ہے۔

راولپنڈی زرعی یونیورسٹی میں چین کو سمجھنے کے حوالے سے اسکالرشپ ٹریننگ پروگرام  کی تقریب سے خطاب کے دوران انہوں نے کہا کہ دونوں ممالک کے درمیان سفارتی تعلقات کے قیام کے بعد سے تمام موسموں پر محیط دوستی دونوں ممالک کے یکے بعد دیگرے رہنماؤں اور عوام کی مشترکہ کوششوں کی بدولت مزیدمضبوط  اور گہری ہوئی ہے۔

انہوں نے کہا کہ دنیا کے حالات جیسے بھی ہوں دونوں ممالک نے ہمیشہ بنیادی مفادات سے متعلق مسائل پر ایک دوسرے کی مضبوطی سے حمایت کی ہے۔ چینی ناظم الاامور کا کہنا تھا کہ چینی اعلی سفارتی عہدیدار یانگ جئے چھی  کے حالیہ دورہ پاکستان سے دونوں ممالک کے درمیان چاروں موسموں پر محیط شراکت داری کو مزید مضبوط بنانے میں مدد ملے گی۔ انہوں نے کہا کہ  پاکستان دنیا کا پانچواں بڑا نوجوان آبادی والا ملک ہے جبکہ پاکستانی نوجوانوں کی کثیر تعداد چین پاکستان دوستی کی تاریخ، چینی ثقافت اور چین کے ترقی کے ماڈل کے بارے میں زیادہ نہیں جانتے۔ انہوں نے اس اُمید کا اظہار کیا کہ اسکالر شپ  ٹریننگ پروگرام کے ذریعے جدید چین، نئے دور کے لیے چینی خصوصیات کے ساتھ سوشلزم پر  چینی صدر شی چن پھنگ کی سوچ اور  نئے ترقی کے تصورات پر  خصوصی توجہ دی  جائے گی جس سے چین کے بارے میں سمجھنے کا بہتر موقع حاصل ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ چین کو آج متعدد تبدیلیوں کا سامنا ہے جبکہ چین اور پاکستان دونوں ہی قومی ترقی کے ایک نازک دور سے گزر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ دورجدید کے تقاضوں اور چیلنجز کو مدنظر رکھتے ہوئے نوجوان نسل کو اپنا اہم کردار ادا کرنا چاہیے۔ انہوں نے کہا کہ نوجوان نسل کو چین پاکستان دوستی کے وارث بننا چاہیے اور نئے دور میں مشترکہ مستقبل کی ایک قریبی چین پاکستان کمیونٹی کی تعمیر کیلئے اپنا مثبت اور تعمیری کردار ادا کرنا چاہیے۔ اس موقع پر پاکستانی شرکاء کا کہنا تھاکہ 71 سال قبل سفارتی تعلقات کے قیام کے بعد سے چین اور پاکستان  نے ہمیشہ  آئینی دوستی کا اظہار کیا ہے۔ انہوں نے اقتصادی ترقی ،قومی حکمرانی اور غربت کے خاتمے کے حوالے سے چینی حکومت کے اقدامات کو سراہا اور اس بات  کا اظہار  کیا کہ چین کی ترقی سے پاکستان کو استفادہ کرنے کا موقع ملے گا۔

تقریب سے خطاب کرتے ہوئے مقررین نے انڈر سٹینڈ چائنہ سکالرشپ پروگرام کی اہمیت پر زور دیتے ہوئے مزید کہا کہ   اس پروگرام کے ذریعے پاکستانی نوجوان نسل کو چین کے بارے میں سیکھنے کا موقع ملے گا ۔ اس موقع پر  چینی ناظم الاامور اور پاکستانی حکام نے راولپنڈی زرعی یونیورسٹی میں چین پاکستان اقتصادی راہداری کے زرعی تعاون  کے مرکز کا افتتاح بھی کیا۔

یہ خبر پڑھیئے

چین نے امریکہ پر زور دیا کہ وہ افغان تعمیر نو کی بنیادی ذمہ داری قبول کرے، چینی ایلچی

15 اگست 2022 کو افغان طالبان کے اقتدار کو ایک سال ہو گیا ہے۔ افغان …

Show Buttons
Hide Buttons