تازہ ترین

عالمی تجارتی تنظیم میں کووڈ-19 کی ویکسین کے لیے حقوقِ املاک دانش سے استثنیٰ کے فیصلے تک پہنچنے کے لیے چین کی کوششیں

عالمی تجارتی تنظیم کی 12ویں وزارتی کانفرنس بارہ سے سترہ جون تک جنیوا میں منعقد ہوئی۔

کانفرنس میں کئی اہم نتائج کا حصول ہوا جن میں پوری شدومد کے ساتھ کووڈ-19 کی ویکسین کے لیے حقوقِ املاک دانش سے استثنیٰ کے وزارتی فیصلے پر توجہ مبذول کروائی گئی۔ یہ اہم کامیابی عالمی “ویکسین کے فرق” کو دور کرنے، ترقی پذیرممالک کی ویکسین تک رسائی اور قوتِ خرید کو بہتر بنانے اورانسانی صحت کےہم نصیب معاشرےکی تشکیل کو فروغ دینے میں اہم کردار ادا کرے گی۔

بیس جون کو چینی وزارت تجارت کے شعبہِ عالمی تجارتی تنظیم کے انچارج نےکہا کہ چین نے مذاکرات کے ایک بے حد اہم موڑ پر تعمیری کردار ادا کیا ہے۔ مئی 2020 میں چینی صدر شی جن پھنگ نے 73ویں ورلڈ ہیلتھ اسمبلی کی ویڈیو کانفرنس کی افتتاحی تقریب میں اعلان کیا تھا کہ چین کی کووڈ-19 ویکسین تحقیق، تیاری اور استعمال کے بعد “گلوبل پبلک پراڈکٹ” ہوگی۔ 

چین نے اب تک 120 سے زائد ممالک اور بین الاقوامی تنظیموں کو 2.2 بلین سے زیادہ ویکسینز فراہم کی ہیں اور انسداد وبا کے بین الاقوامی تعاون میں ایک اہم شراکت دار ہے۔ کووڈ-19 کی ویکسین کے لیے حقوقِ املاکِ دانش سے استثنی کے بارے میں وزارتی فیصلہ، عالمی چیلنجز سے نمٹنے کے لیے عالمی تجارتی تنظیم کے اہم کردار کو ظاہر کرتا ہے اور اس نے کثیر الجہت تجارتی نظام میں اعتماد کومؤثر طور پر بڑھایا ہے۔

یہ خبر پڑھیئے

چین کا کھلے پن کو فروغ دینے کا عزم پختہ ہے، چینی وزارت خارجہ

چین کا کھلے پن کو فروغ دینے کا عزم پختہ ہے، چینی وزارت خارجہ

بارہ اگست کو وزارت خارجہ کی پریس کانفرنس میں ایک رپورٹر نے پوچھا کہ چائنہ کونسل فار …

Show Buttons
Hide Buttons