تازہ ترین
وزیر داخلہ سے چین کے محکمہ خارجہ سلامتی امور کے قونصلر کی چینی ناظم الامور کے ہمراہ ملاقات

وزیر داخلہ سے چین کے محکمہ خارجہ سلامتی امور کے قونصلر کی چینی ناظم الامور کے ہمراہ ملاقات

پاکستان اور چین نے چینی باشندوں کی سکیورٹی کیلئے روابط کو مزید مؤثر بنانے پر اتفاق کرتے ہوئے اس عزم کا اظہار کیا ہے کہ کراچی دہشت گردی جیسے واقعات سے پاکستان اور چین کے درمیان تعلقات متاثر نہیں ہوں گے۔

وزیر داخلہ رانا ثناءاللہ سے چین کےمحکمہ خارجہ سلامتی امورکے قونصلر وینگ ڈیکشیوؤ نے چینی ناظم الامور کے ہمراہ بدھ کو اسلام آباد میں ملاقات کی جس میں پاک۔چین دوطرفہ تعلقات سمیت ،باہمی دلچسپی کے دیگر امور پر بات چیت کی گئی۔ وزارت داخلہ کی طرف سے جاری بیان کے مطابق ملاقات میں پاکستان میں موجود چینی شہریوں کی سکیورٹی کویقینی بنانے کے حوالے سےاقدامات پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

ملاقات میں اس عزم کا اظہار کیا کہ کراچی دہشت گردی جیسے واقعات سے پاکستان اور چین کے درمیان تعلقات متاثرنہیں ہوں گے۔ ملاقات میں سکیورٹی کو یقینی بنانے کیلئے وزارت داخلہ اور چینی سفارتخانے کے درمیان روابط مزید مؤثر بنانے پر بھی اتفاق کیا گیا۔ وزیر داخلہ نے کراچی یونیورسٹی دہشت گردی واقعے میں چینی شہریوں کی جانوں کے ضیاع پر دکھ اور افسوس کا اظہار کیا۔

چینی قونصلر نے کہا کہ چین پاکستان کے ساتھ جاری ترقیاتی منصوبوں میں مالی اورتکنیکی معاونت جاری رکھے گا، چینی قیادت پاکستان اور چین کےعوام کے درمیان تعلقات کوانتہائی قدرکی نگاہ سے دیکھتی ہے، شرپسندعناصر کی پاک چین تعلقات خراب کرنے کی کسی بھی سازش کو مل کر ناکام بنائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ہماری خواہش ہے کہ کراچی یونیورسٹی دہشت گردی واقعہ کی تحقیقات جلدمکمل ہوں اور مجرمان اپنے انجام کو پہنچیں۔

وزیر داخلہ رانا ثناءاللہ نے کہا کہ پاکستان میں موجود چینی شہریوں کی سکیورٹی یقینی بنانے کیلئے ریاست تمام وسائل استعمال کررہی ہے، وزیراعظم شہبازشریف چینی شہریوں کی سکیورٹی کے معاملات کی خود نگرانی کررہے ہیں۔ انہوں نے یقین دلایا کہ کراچی یونیورسٹی دہشت گردی واقعہ میں ملوث تمام کرداروں کوقرارواقعی سزا دیں گے، وزارت داخلہ میں فارن نیشنل سکیورٹی سیل کا قیام عمل میں لایا گیا ہے، ڈیسک کے قیام کا مقصد پاکستان میں غیرملکی باشندوں بالخصوص چینی شہریوں کی سکیورٹی کو یقینی بنانے کے لئے مؤثر رابطہ کاری ہے۔

انہوں نے کہا کہ سی پیک منصوبوں پر کام کرنے والے چینی باشندوں کیلئے فول پروف سکیورٹی کے انتظامات کئے گئے ہیں تاکہ آئندہ دہشت گردی کا کوئی واقعہ نہ ہو، اس کے لئے وفاق اورصوبوں کے درمیان کوآرڈینیشن کو مؤثر بنایا جاررہا ہے۔رانا ثناءاللہ نے کہا کہ پاکستان اور چین کے درمیان تعلقات تاریخی اور انتہائی دیرینہ ہیں، دشمن عناصر کی دوطرفہ تعلقات خراب کرنے کی مذموم سازشوں کو کسی صورت کامیاب نہیں ہونے دیں گے۔ ملاقات میں سیکرٹری داخلہ یوسف نسیم کھوکھر بھی شریک ہو ئے۔ سیکرٹری داخلہ نے کراچی یونیورسٹی دھماکے میں چینی شہریوں کی جانوں کے ضیاع پر افسوس کا اظہار کیا۔

یہ خبر پڑھیئے

شدید گرمی کے باعث 2053 تک وسطی امریکہ کے 10 کروڑ افراد متاثر ہوں گے، مطالعہ

شدید گرمی کے باعث 2053 تک وسطی امریکہ کے 10 کروڑ افراد متاثر ہوں گے، مطالعہ

ایک نئی تحقیق کے مطابق سال 2053ء تک “انتہائی گرمی کی پٹی” میں رہائش پذیر …

Show Buttons
Hide Buttons