بینکوں اور مالیاتی اداروں کی جانب سے نجی شعبہ کو قرضوں کی فراہمی ایک کھرب روپے تک بڑھنے کی توقع

رواں مالی سال کے اختتام تک بینکوں اور مالیاتی اداروں کی جانب سے نجی شعبہ کو قرضوں کی فراہمی ایک کھرب روپے تک بڑھنے کی توقع ہے۔

سٹیٹ بینک آف پاکستان کے اعدادوشمار کے مطابق جاری مالی سال میں یکم جولائی 2021 تا 11 فروری 2022 کے دوران بینکوں اور مالیاتی اداروں کی جانب سے نجی شعبہ کو قرضہ جات کی فراہمی 813 ارب روپے تک پہنچ گئی جبکہ گزشتہ مالی سال کے اسی عرصے کے دوران شعبہ کو جاری کردہ قرضہ جات کا حجم 292 ارب روپے رہا تھا۔

اس طرح گزشتہ مالی سال کے مقابلہ میں رواں مالی سال میں یکم جولائی تا 11 فروری 2021-22 کے دوران بینکوں اور مالیاتی اداروں کی طرف سے نجی شعبہ کو قرضوں کی فراہمی میں 521 ارب روپے یعنی 178.42 فیصد کا نمایاں اضافہ ریکارڈ کیا گیا ہے۔

واضح رہے کہ رواں مالی سال کے اختتام مارچ تا جون 2022 کے دوران قرضوں کے اجرا کا تسلسل جاری رہا تو نجی شعبہ کو قرضوں کی فراہمی ایک کھرب روپے سے بڑھنے کا امکان ہے جس کے نتیجہ میں نجی شعبہ کی تعمیر و ترقی میں مدد ملے گی۔

یہ خبر پڑھیئے

صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی سے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کی الوداعی ملاقات

صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی سے چیف آف آرمی سٹاف جنرل قمر جاوید باجوہ نے …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons