پانچ برس سے کم عمر بچوں کو حرمین الشریفین لے جانے کا  پرمٹ جاری نہیں کیا جائے گا، سعودی وزارت حج و عمرہ

سعودی وزارت حج و عمرہ نے کہا ہے کہ حرمین شریفین جانے کے لیے پانچ برس سے کم عمر بچوں کو پرمٹ جاری نہیں کیا جائے گا۔

سعودی اخبار نے وزارت حج و عمرہ کے حوالے سے بتایا ہے کہ عمرہ کے لیے آنے والے ایسے افراد جن کے ہمراہ بچے ہوتے ہیں ان کی عمر کی حد کے حوالے سے قبل ازیں کہا گیا تھا کہ حرمین جانے والوں کے لیے عمر کی مخصوص حد کی شرط نہیں بلکہ قوت مدافعت کا حامل ہونا لازمی ہے۔

وزارت نے کہا کہ حرمین الشریفین جانے کے لیے 5برس سے کم عمر بچوں کو پرمٹ جاری نہیں کیا جائے گا۔

واضح رہے کورونا وائرس سے بچاؤ کے لیے وزارت صحت کی جانب سے وضع کردہ ضوابط پر عمل درآمد جاری ہے اس حوالے سے ’توکلنا‘ اور’اعتمرنا ‘ ایپ کے ذریعے وہ افراد حرم مکی الشریفین جانے کے لیے پرمٹ حاصل کر سکتے ہیں جنہوں نے ویکسین کی دونوں خوراکیں لگوائی ہوئی ہوں اور وہ صحت مند ہوں ۔

کورونا ویکسین کے حوالے سے وزارت صحت کے قوانین کے مطابق ایسے افراد جنہوں نے ویکسین کی دوسری خوراک آٹھ ماہ قبل لگوائی ہے ان کے لیے لازمی ہے کہ وہ بوسٹر ڈوز لگوائیں۔

وہ افراد جو مذکورہ زمرے میں شامل ہیں اور انہوں نے بوسٹر ڈوز نہیں لگوائی توکلنا پر ان کا امیون سٹیٹس ختم ہوجائے گا جس کی وجہ سے وہ عمرہ پرمٹ حاصل نہیں کرسکیں گے۔

یہ خبر پڑھیئے

اوپیک پر کمزور ہوتی امریکی گرفت

اوپیک پر کمزور ہوتی امریکی گرفت

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons