افغانستان کے قائم مقام وزیر دفاع کی رہائش گاہ کے نزدیک بم دھماکہ

تین اگست کو افغانستان کے دارالحکومت کابل میں قائم مقام وزیر دفاع بسم اللہ محمدی کی رہائش گاہ کے نزدیک ایک زوردار دھماکے کے بعد سیکیورٹی فورسز اور حملہ آوروں کے درمیان فائرنگ کا تبادلہ بھی ہوا۔

فائرنگ کا سلسلہ کئی گھنٹوں تک جاری رہا اور اس دوران تین چھوٹے دھماکے بھی ہوئے۔ افغان وزارت داخلہ کے ترجمان کے مطابق پانچ گھنٹے تک جاری رہنے والے مقابلے کے دوران سیکیورٹی فورسز نے تمام حملہ آوروں ہلاک کر دیا۔

حملے میں آٹھ عام شہری بھی جاں بحق ہوئے ہیں اور بیس سے زائد زخمی ہوئے ہیں۔ دھماکے کے بعد چند مسلح افراد رہائشی علاقے داخل ہوئے جہاں ان کی سیکورٹی فورسز کے ساتھ جھڑپیں ہوئی ہیں۔

یہ خبر پڑھیئے

سائبر تمدن کے لیے چین کا کلیدی کردار: سید پارس علی

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons