فلم، ٹی وی اور اسٹیج ڈراموں کے مشہور اداکار ملک انوکھا کی برسی

فلم، ٹی وی اور اسٹیج ڈراموں کے مشہور اداکار ملک انوکھا کی برسی

آج پاکستانی فلم، ٹی وی اور اسٹیج ڈراموں کے مشہور اداکار ملک انوکھا کی برسی منائی جارہی ہے۔

وہ 26 جولائی 2008ء کو حرکتِ قلب بند ہو جانے کے باعث وفات پا گئے تھے۔ ملک انوکھا کا فنی کیریئر 40 سال پر محیط ہے جس میں انھوں نے زیادہ تر مزاحیہ کردار ادا کیے۔

وہ 1960ء سے 1970ء کی دہائی تک فلم اور ڈراموں میں مختلف کرداروں میں رنگ بھرتے نظر آئے۔ ملک انوکھا نے سندھی زبان میں‌ بننے والی کئی فلموں میں اداکاری اپنی اداکاری کے جوہر دیکھائے۔ انھوں نے اپنے وقت کے مشہور اور کامیاب ترین ڈراموں برزخ، کشکول، منڈی، امر بیل، فن کار گلی میں کام کیا۔

ملک انوکھا کا تعلق اندرونِ سندھ کے شہر میر پور خاص سے تھا۔ وہ اردو، پنجابی اور سندھی زبان پر عبور رکھتے تھے۔ یہی وجہ ہے کہ ان تینوں زبانوں میں بننے والی فلموں اور ڈراموں میں انھیں کردار سونپے گئے جنھیں اپنی فن کارانہ صلاحیتوں کا اظہار کرتے ہوئے ملک انوکھا نے نہایت خوبی سے ادا کیا اور شہرت حاصل کی۔

1970ء کی دہائی میں پی ٹی وی کا ڈرامہ ’دبئی چلو‘ ان کی وجہِ شہرت بنا۔ مزاحیہ سندھی ڈرامہ ہل پنھل ہل میں ان کے مخصوص انداز میں لوگوں نے ڈائیلاگ ’ہل پنھل‘ سنا تو عرصے تک اس سے محظوظ ہوتے رہے اور یہ ڈائیلاگ شائقین کی زبان پر رہا۔

یہ خبر پڑھیئے

سائبر تمدن کے لیے چین کا کلیدی کردار: سید پارس علی

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons