نیٹو "چین ایک خطرہ جیسے نظریات " کو ہوا دینا بند کرے، چین

نیٹو “چین ایک خطرہ جیسے نظریات ” کو ہوا دینا بند کرے، چین

چین نے نیٹو پر زور دیا کہ وہ چین کی ترقی کو ایک مقصد اور عقلی انداز سے دیکھے اور “چین ایک خطرہ جیسے نظریات ” کو ہوا دینا بند کرے۔

یوروپی یونین میں چینی مشن کے ترجمان کا کہنا ہے کہ نیٹو کے چین کی پر امن ترقی اوربین الاقوامی صورتحال سے متعلق تما م تر دعوے اس کے اپنے کردار کی غلط فہمی اور سرد جنگ کی ذہنیت کا تسلسل ہیں۔ ترجمان کا کہنا تھا کہ چین بلا اشتعال قومی دفاعی پالیسی پر عمل پیرا ہے جو خالصتا چین کے دفاع کے لئے ہے اور چین کا فوجی جدید کاری کا جواز ، معقول اور شفاف ہے۔

ترجمان نے کہا کہ رواں سال کے لئے چین کے دفاعی اخراجات کا تخمینہ تقریبا 209 بلین ڈالر کے قریب ہے ، جو اس کی مجموعی ملکی پیداوار کا تقریبا 1.3 فیصد ہے ۔ ترجمان کا کہنا تھا کہ نیٹو کا 30 ممالک کے لئے رواں سال کے فوجی بجٹ کا تخمینہ 1.17 ٹریلین ڈالر تک پہنچنے کی توقع ہے ، جو عالمی فوجی اخراجات کے نصف سے زیادہ اور چین سے 5.6 گنا زیادہ ہے۔ واضح رہے کہ نیٹو نے متنبہ کیا تھا کہ چین کو اپنے جوہری ہتھیاروں اور تیزی سے اپنی افواج کو جدید بنانے کے پروگرام کو واضح کرنا ہو گا۔

یہ خبر پڑھیئے

ڈاکٹر ثانیہ نشتر کی ورلڈ بینک کے ریجنل نائب صدر سے ملاقات

ڈاکٹر ثانیہ نشتر کی ورلڈ بینک کے ریجنل نائب صدر سے ملاقات

 وزیراعظم کی معاون خصوصی ڈاکٹر ثانیہ نشتر کی ورلڈ بینک کے ریجنل نائب صدر برائے …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons