چینی وزارت خارجہ کی جانب سے جاپان اور آسٹریلیا کے بیان “چین کا خطرہ” کا جواب

چین کی وزارت خارجہ کے ترجمان وانگ وین بین نے نو تاریخ کو منعقدہ رسمی پریس کانفرنس میں کہا کہ جاپان اور آسٹریلیا کی جانب سے دیا جانے والا بیان “چین کا خطرہ” چین کو بدنام کرنا اورچین کے اندرونی امور میں مداخلت کرنا ہے۔

چین اس کی سخت مخالفت کرتا ہے۔ جاپان اور آسٹریلیا کے وزرائے خارجہ اور وزرائے دفاع کے مذاکرت کے بعد جاری کردہ مشترکہ بیان میں سمندری امور سے متعلق چین کے موقف اور کارروائیوں کی مخالفت اور سنکیانگ اور ہانگ کانگ کے امور پر تشویش کا اظہار کیا گیا ہے۔

اس بیان کاجواب دیتے ہوئےچینی ترجمان نے کہا کہ بحیرہ جنوبی چین کےجزیرہ اورآس پاس سمندری علاقے، جزیرہ دیاویو اور اس کے آس پاس جزیروں کا اقتداراعلیٰ چین کے پاس ہے، جس میں شک کی کوئی گنجائش نہیں ہے۔

چین کے ملک کے اقتداراعلیٰ، سکیورٹی اور ترقی کے مفادات کے تحفظ کا عزم پختہ ہے۔ ہم جاپان اور آسٹریلیا پر زور دیتے ہیں کہ دوسرے ممالک کے اقتداراعلیٰ کے احترام دوسرے ممالک کے داخلی امور میں عدم مداخلت اور عالمی قانون اور بین الاقوامی تعلقات کے بنیادی اصولوں کے مطابق چین کے داخلی امور میں مداخلت سے باز رہیں اور خطے میں امن و استحکام کو نقصان نہ پہنچائیں۔

یہ خبر پڑھیئے

پاکستان اپنی سرزمین کسی ملک کے خلاف استعمال نہیں ہونے دے گا: وزیر خارجہ

پاکستان اپنی سرزمین کسی ملک کے خلاف استعمال نہیں ہونے دے گا: وزیر خارجہ

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے افغان قیادت پر زور دیا ہے کہ وہ اپنے …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons