دوحہ میں افغان حکومت اور طالبان کے درمیان امن مذاکرات کا آغاز

افغان طالبان کے ترجمان سہیل شاہین نے نو تاریخ کو سوشل میڈیا پر بیان دیتے ہوئے کہا کہ طالبان اور افغان حکومت کے مابین مذاکرات آٹھ  تاریخ کی شام قطر کے دارالحکومت دوحہ میں  منعقد ہوئے۔

دونوں فریقوں نے امن مذاکرات کو تیزی سے آگے بڑھانے پر اتفاق کیا اور مذاکرات کے ایجنڈے پر مزید تبادلہ خیال کیا۔ مئی کے وسط میں دونوں فریقوں کے امن مذاکرات کے نئے دور کا اعلان کرنے کے بعد سے یہ پہلے مذاکرات ہیں۔

یاد رہے کہ ستمبر 2020 میں، افغان حکومت اور طالبان نے دوحہ میں امن مذاکرات کا آغاز کیا تھا، لیکن بہت سے اختلافات کی وجہ سے مذاکرات میں بہت کم پیش رفت ہوئی تھی۔ اس کے ساتھ افغان سرکاری فوج اور طالبان کے مابین مسلح جھڑ پیں کثرت سے پیش آتی رہیں، جس کی وجہ سے مذاکرات بار بار تعطل کا شکار رہے۔

یہ خبر پڑھیئے

پاکستان اپنی سرزمین کسی ملک کے خلاف استعمال نہیں ہونے دے گا: وزیر خارجہ

پاکستان اپنی سرزمین کسی ملک کے خلاف استعمال نہیں ہونے دے گا: وزیر خارجہ

وزیر خارجہ شاہ محمود قریشی نے افغان قیادت پر زور دیا ہے کہ وہ اپنے …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons