تازہ ترین
شہنشاہ جذبات اداکار محمد علی کو مداحوں سے بچھڑے آج 14 برس بیت گئے

شہنشاہ جذبات اداکار محمد علی کو مداحوں سے بچھڑے آج 14 برس بیت گئے

شہنشاہ جذبات اداکار محمد علی کو دنیا سے رخصت ہوئے 14 برس بیت گئے لیکن آج بھی ان کی بے مثل اداکاری کے چاہنے والے ان کی کمی کو شدت سے محسوس کرتے ہیں۔

محمد علی کی بھرپور آواز نے انہیں ایک بہترین براڈ کاسٹر کی حیثیت سے منوایا اور انہیں فلمی دنیا تک پہنچانے میں بھی ان کی آواز نے اہم کردار ادا کیا۔ محمد علی نے 1962ء میں فِلم ’چراغ جلتا رہا‘ سے بطور ولن فلمی کریئر کا آغاز کیا اور ابتدائی چند فلموں میں منفی کردار نبھائے، بطور ہیرو ان کی پہلی ’مسٹرایکس‘ تھی لیکن فلم ’شرارت‘ ’مسٹر ایکس‘ سے پہلے ریلیز ہوگئی۔ محمد علی کی شہرت کا آغاز 1964ء میں ریلیز ہونے والی فلم ’خاموش رہو‘ سے ہوا، اسی فلم پر انہوں نے بطور معاون اداکار نگار ایوارڈ بھی حاصل کیا۔

اداکار محمد علی نے اپنے پورے کیریئر میں 10 نگار ایوارڈز حاصل کیے۔ فلم ’صاعقہ‘، ’آس‘،’ آئینہ اور صورت‘، ’انسان اور آدمی‘ اداکار محمد علی کی ایسی فلمیں ہیں جن میں ان کی اداکاری عروج پر رہی۔ اداکار محمد علی ایشیاء کے 25 بہترین اداکاروں کی فہرست میں شامل ہیں۔ انہوں نے 275 کے قریب فلموں میں کام کیا جن میں 14 اردو، پنجابی، پشتو، بنگالی اور ہندی فلمیں شامل ہیں۔

پاکستانی فلم انڈسٹری کے مایہ ناز اداکار محمد علی کا انتقال 19 مارچ 2006ء کو ہوا تاہم وہ آج بھی اپنے چاہنے والوں کے دلوں میں بستے ہیں۔ اداکار محمد علی کو فلم انڈسٹری کے لئے بہترین خدمات انجام دینے پر پرائیڈ آف پرفارمنس اور تمغہ امتیاز سے بھی نوازا جاچکا ہے۔

یہ بھی چیک کریں

چین کی کرونا کیخلاف جنگ میں پاکستانی حمایت کی تعریف

چین کی کرونا کیخلاف جنگ میں پاکستانی حمایت کی تعریف

پاکستان میں قائم چینی سفارتخانے نے کہا ہے کہ چین کی جانب سے نوول کرونا وائرس نمونیا …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons