تازہ ترین
پاکستان و ترکی کے درمیان مختلف شعبوں میں تعاون کے فروغ کے لئے مفاہمت کی یادداشتوں پر دستخط

پاکستان و ترکی کے درمیان مختلف شعبوں میں تعاون کے فروغ کے لئے مفاہمت کی یادداشتوں پر دستخط

پاکستان اور ترکی کے درمیان جمعہ کو اسلام آباد میں مختلف شعبوں میں تعاون کو فروغ دینے کے لئے مفاہمت کی کئی یادداشتوں اور معاہدوں پر دستخط کئے گئے۔

پاکستان اور ترکی نے دونوں ملکوں کے درمیان تذویراتی اقتصادی لائحہ عمل کے بارے میں مشترکہ اعلامیے پر بھی دستخط کئے۔ وزیراعظم عمران خان اور ترکی کے صدر رجب طیب اردوان نے دستاویز پر دستخط کئے اور ان کا تبادلہ کیا۔

ٹی آر ٹی ترکی اور پاکستان براڈ کاسٹنگ کارپوریشن کے درمیان تعاون کے معاہدے پر دستخط ہوئے۔ پاکستان براڈ کاسٹنگ کارپوریشن کی ڈائریکٹر جنرل ثمینہ وقار نے اپنے ترک ہم منصب کے ساتھ معاہدے پر دستخط کئے اور دستاویز کا تبادلہ کیا۔ اسی طرح کے معاہدے پر ٹی آر ٹی ترکی اور پی ٹی وی نے بھی دستخط کئے۔ معاہدے پر پی ٹی وی کے منیجنگ ڈائریکٹر عامر منظور اور ان کے ترک ہم منصب نے دستخط کئے۔

ترک صدر رجب طیب اردوان نے تقریب سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ترکی کشمیر کے عوام کے ساتھ بھرپور اظہار یکجہتی کرتا ہے جنہیں طویل عرصے سے مظالم اور بدترین نتائج کا سامنا ہے۔ انہوں نے کہا کہ ترکی بھارت اور پاکستان کے درمیان اقوام متحدہ کی قراردادوں اور کشمیری عوام کی خواہشات کی بنیاد پر مذاکرات کے ذریعے مسئلہ کشمیر کا پرامن حل تلاش کرنے کا حامی ہے۔

انہوں نے علاقائی استحکام کیلئے پاکستان کی کوششوں اور دہشت گردی کیخلاف اقدامات کی تعریف کی۔ رجب طیب اردوان نے کہا کہ فوج اور دفاع کے شعبے میں ہمارا تعاون ہماری فعال شراکت داری کا حصہ ہے۔ ترک صدر نے کہا کہ سٹریٹجک اکنامک فریم ورک ایک لائحہ عمل ہے کہ ہمیں اقتصادی تعاون کو مزید وسعت دینے کے لئے کیا کرنا ہے۔

طیب اردوان نے کہا کہ ہم پاکستان کی اقتصادی اور سماجی ترقی میں مدد کے لئے نقل و حمل، توانائی، سیاحت، صحت عامہ، قانون نافذ کرنے اور صحت کے شعبوں میں ہرممکن تعاون کے لئے تیار ہیں۔

وزیراعظم عمران خان نے اپنے خطاب میں کشمیریوں پر ڈھائے جانے والے مظالم پر آواز بلند کرنے پر ترک صدر کا شکریہ ادا کیا۔ انہوں نے کہا کہ گزشتہ چھ ماہ سے تقریباً 80 لاکھ کشمیری عملی طور پر محصور ہیں۔ کشمیری رہنماؤں کو گرفتار اور ذرائع مواصلات معطل ہیں۔

وزیراعظم نے کہا کہ سٹریٹجک اقتصادی تعاون کے بارے میں مفاہمت کی یادداشت پر دستخط سے پاکستان اور ترکی کے درمیان تجارتی تعلقات کو وسعت دینے کی نئی راہیں کھلیں گی۔ انہوں نے کہا کہ ٹی آر ٹی اورپاکستان براڈ کاسٹنگ کارپوریشن اور پاکستان ٹیلی ویژن کے درمیان تعاون کے معاہدے پر دستخط سے اسلاموفوبیا کے بیانیے کے خلاف مل کر کام کرنے کا موقع ملے گا۔ انہوں نے کہا کہ ہم ترکی کی فلمی صنعت کو اسلاموفوبیا کے خلاف استعمال کرنا چاہتے ہیں۔

عمران خان نے کہا کہ پاکستان سیاحت اور تعمیرات سمیت مختلف شعبوں میں ترکی کی تیز رفتار ترقی کے تجربے سے سیکھنا چاہتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت تعمیرات کے شعبے کو ترکی کی طرز پر ترقی دینا چاہتی ہے۔ عمران خان نے کہا کہ پاکستان اور ترکی کا مختلف علاقائی مسائل پر متفقہ مؤقف ہے۔

یہ بھی چیک کریں

مائیک پومپیو کا جھوٹ اور امریکہ کی گمراہی: سی آر آئی کا تبصرہ

امریکی وزیر خارجہ مائیک پومپیو نے حال ہی میں میونخ سیکورٹی کانفرنس میں کہا “مغربی ممالک …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons