تازہ ترین

کوئی لین شہر اور دریائے چانگ لی

چین کا سب سے مشہور سیاحتی شہر کوئی لین ملک کے جنوب میں واقع کوانگ شی خوداختیار علاقے کے شمال مشرقی حصے میں واقع ہے۔ اس شہر کو زمانہ قدیم سے ہی جنت نظیر کہا جاتا ہے، جسے اہم سیاحتی شہر ہونے کے ساتھ ساتھ ایک تاریخی اور ثقافتی مقام کی حیثیت بھی حاصل ہے۔ دریائے لی چانگ کے دلفریب مناظر اور کارسٹ نامی قدرتی نقشہ نگاری کوئی لین شہر کی خاص علامتیں ہیں۔ یہاں سرسبز و شاداب پہاڑ، صاف شفاف پانی، عجیب و غریب غار اور انوکھی اشکال کی چٹانیں سیاحوں کیلئے خاص کشش رکھتی ہیں۔

کوئی لین شہر زمانہ قدیم سے ہی اپنے وسیع و عریض جنگلات، چونے اور جپسم کی منفرد پہاڑی چوٹیوں ، حسین وادیوں، گنگناتے آبشاروں اور پہاڑوں کی ڈھلوانوں پر بنائے گئے کھیتوں کی وجہ سے بہت مشہور رہا ہے۔ کوئی لین شہر میں 12 اقلیتی قومیں آباد ہیں جن میں چوانگ، یاؤ، میاؤ، تونگ، مولاؤ اور ماؤ نان شامل ہیں۔ کوئی لین کے سحر انگیز قدرتی مناظر، علاقائی رسم و رواج اور تاریخ و ثقافت سے لطف اندوز ہونے کیلئے چینی اور غیر ملکی سیاحوں کے علاوہ بیرونی ممالک کے چند سرکردہ راہنماء بھی اکثر یہاں آتے ہیں۔

کوئی لین کے مشرق میں بہنے والے دریائے لی چانگ کی بل کھاتی موجیں آئینے کی طرح صاف و شفاف دیکھائی دیتی ہیں۔ اس دریا کی مجموعی لمبائی 437 کلومیٹر ہے، جس کا آغاز کوئی لین کے شنگ آن نامی قصبے سے ہوتا ہے۔ یہ کاؤنٹی دنیا کے مختلف مقامات پر واقع کارسٹ نامی قدرتی نقشہ نگاری  کے نمونوں کے حامل علاقوں میں سے ایک ہے۔ یہاں کے پہاڑوں میں حیرت انگیز غار موجود ہیں جن میں عجیب و غریب اشکال کی چٹانیں پائی جاتی ہیں۔

شنگ آن سے یانگ شو قصبے تک دریائے لی چانگ کی لمبائی 83 کلومیٹر ہے، جسے اس دریا کا سب سے دلکش مناظر کا حامل علاقہ قرار دیا جاتا ہے۔ اس علاقے سے دریائے لی چانگ بل کھاتا ہوا کھیتوں، پہاڑوں اور چٹانوں کے بیچ سے گزرتا ہوا اپنی منزل کی طرف رواں دواں رہتا ہے۔ اس تمام علاقے کے مناظر اس قدر خوبصورت ہیں کہ یہاں آنیوالے سیاح اس کی دلکشی میں کھو جاتے ہیں۔

کوئی لین کے قصبے یانگ شو کو سیاحوں کی جنت کہا جاتا ہے۔  اس قصبے کی مغربی جانب واقع سڑک کی شکل انگریزی حرف ایس سے ملتی ہے، جس کی لمبائی 517 میٹر اور چوڑائی تقریباً 8 میٹر  ہے۔ سڑک کی تہہ سنگ مرمر سے تعمیر کی گئی ہے جبکہ اسکے کناروں پر روائتی طرز تعمیر کے مکانات موجود ہیں۔ یانگ شو قصبے کے اس حصے میں موجود دوکانوں پر یادگاری تحائف اور خوردونوش کی فروخت کی جاتی ہیں۔ کوئی لین میں ہر سال سیاحوں کی بڑی تعداد میں آمد کے پیش نظر یہاں مہمانوں کیلئے بہت سی سہولیات فراہم کی جاتی ہیں۔

یہ بھی چیک کریں

Guide to apply for Chinese Government Scholarship

Introduction to Chinese Government Scholarships In order to promote the mutual understanding, cooperation and exchanges …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons