علی حیدر گیلانی کی ویڈیو سامنے آنے کے معاملہ، الیکشن کمیشن نوٹس لے، معاون خصوصی

علی حیدر گیلانی کی ویڈیو سامنے آنے کے معاملہ، الیکشن کمیشن نوٹس لے، معاون خصوصی

وزیراعظم کے معاون خصوصی برائے سیاسی ابلاغ ڈاکٹر شہباز گل نے کہا ہے کہ سید یوسف رضا گیلانی کے بیٹے کی ویڈیو سامنے آنے کے معاملہ کا الیکشن کمیشن نوٹس لے، سید یوسف رضا گیلانی کو سینٹ انتخابات کیلئے نااہل قرار دیا جائے اور سینٹ انتخابات میں شفافیت یقینی بنائی جائے، گذشتہ کئی دہائیوں سے اس مافیا کا راج رہا ہے، آج کی ویڈیو سے ثابت ہو گیا ہے کہ یہ مافیا کسی صورت آزادانہ و شفاف انتخابات کرانے کیلئے راضی نہیں ہے۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے منگل کو پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔

انہوں نے کہا کہ سید یوسف رضا گیلانی کو سپریم کورٹ نے نااہل قرار دیا، ان کی اہلیہ نے سرکاری ہار چوری کیا اور آج ان کا بیٹا ممبران اسمبلی سے بھائو تائو کرکے خریداری کرتے ہوئے پکڑا گیا ہے، یہ پورا خاندان خرید و فروخت کا ماہر ہے۔

انہوں نے کہا کہ سندھ میں پیپلز پارٹی نے جو کچھ کیا ہے وہ سب نے دیکھا ہے، وہاں ارکان اسمبلی کی مارکٹائی کی گئی ہے، سندھ اسمبلی کے ممبران کی جو ویڈیوز سامنے آئی ہیں ان میں پیپلز پارٹی کی اعلیٰ قیادت بھی موجود تھی، اس سے ظاہر ہوتا ہے کہ یہی لوگ اس کھیل کی سرپرستی کر رہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ سابق وزیراعظم یوسف رضا گیلانی کے بیٹے نے جو کھیل کھیلا ہے وہ اس ویڈیو سے سامنے آ گیا ہے، وزیراعظم عمران خان کا پہلے بھی واضح اور دوٹوک موقف تھا کہ شفاف اور منصفانہ انتخاب ہونا چاہئے، سپریم کورٹ نے بھی شفاف انتخابات کرانے کی ہدایت کی۔

انہوں نے کہا کہ الیکشن کمیشن قابل احترام اور آزاد ادارہ ہے، سپریم کورٹ نے اسے جدید ٹیکنالوجی کی مدد سے شفاف اور منصفانہ الیکشن کرانے کا حکم دیا، اس حکم کے تناظر میں حکومت نے الیکشن کمیشن کو ہر قسم کی ٹیکنالوجی کی دستیابی یقینی بنانے میں تعاون کی پیشکش کی۔

انہوں نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان نے 2013 کے عام انتخابات اور 2015 کے سینٹ انتخابات میں شفاف اور منصفانہ الیکشن کیلئے آواز اٹھائی۔ انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ نے بھی کہا ہے کہ ووٹوں کو قابل شناخت ہونا چاہئے، پاکستان مسلم لیگ (ن) اور پیپلز پارٹی نے میثاق جمہوریت میں قابل شناخت ووٹوں کے حوالہ سے معاہدہ کیا، سینٹ کمیٹی آف ہول میں بھی انہوں نے قابل شناخت ووٹوں پر اتفاق کیا۔ انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ اور الیکشن کمیشن کو یوسف رضا گیلانی کے بیٹے کی اس ویڈیو کا نوٹس لینا چاہئے۔

انہوں نے کہا کہ یوسف رضا گیلانی کو سینٹ انتخابات کیلئے نااہل قرار دیا جائے، سینٹ کے ہونے والے انتخابات کو شفاف اور منصفانہ بنایا جائے۔ انہوں نے کہا کہ وزیراعظم عمران خان کا خدشہ درست ثابت ہوا ہے کہ یہ دونوں جماعتیں آزادانہ اور منصفانہ انتخابات نہیں چاہتیں۔ انہوں نے کہا کہ ویڈیو سے ثابت ہوا کہ ارکان اسمبلی کی خرید و فروخت ہو رہی ہے، الیکشن کمیشن کو اس مافیا کو نکیل ڈالنی چاہئے۔

معاون خصوصی نے کہا کہ یوسف رضا گیلانی اخلاقی اور قانونی طور پر ساکھ کھو چکے ہیں، الیکشن کمیشن کو ان کے خلاف قانونی کارروائی کرنی چاہئے۔انہوں نے کہا کہ سپریم کورٹ کے حکم پر من و عن عمل یقینی بنایا جائے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف واحد جماعت ہے جس نے ووٹ بیچنے والے اپنی پارٹی کے 20 ارکان اسمبلی کو پارٹی سے نکالا۔

انہوں نے کہا کہ ہم نے سینٹ انتخابات میں شفافیت یقینی بنانے کیلئے اکتوبر میں پارلیمنٹ میں بل پیش کیا، اس معاملہ پر سپریم کورٹ میں گئے، سپریم کورٹ نے کہا کہ خرید و فروخت رکنی چاہئے، سپریم کورٹ نے کہا کہ ووٹ دائمی خفیہ نہیں رکھا جا سکتا۔ انہوں نے کہا کہ اس مافیا سے ارکان اسمبلی کی جان کو خطرہ ہے، ان کی سکیورٹی یقینی بنائی جائے۔ انہوں نے کہا کہ سینٹ انتخابات میں شفافیت لانے کیلئے الیکشن کمیشن اور میڈیا کو اپنا کردار ادا کرنا چاہئے۔

انہوں نے کہا کہ لوٹ مار کرنے والوں کا کردار واضح ہو چکا ہے، الیکشن کمیشن کسی کو بھی بلا کر تحقیقات کر سکتا ہے، اسے یوسف رضا گیلانی کے بیٹے سے تحقیقات کرنی چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ گذشتہ 40 ، 50 سال سے یہ مافیا راج کر رہا ہے، اب اس ویڈیو کے سامنے آنے سے ثابت ہو گیا ہے کہ یہ مافیا کسی صورت شفاف اور آزادانہ الیکشن نہیں ہونے دے گا۔

یہ خبر پڑھیئے

امریکہ: طوفانی بارشوں اور تیز ہواؤں کے باعث مختلف حادثات میں 2 افراد ہلاک اور متعدد زخمی

امریکہ: طوفانی بارشوں اور تیز ہواؤں کے باعث مختلف حادثات میں 2 افراد ہلاک اور متعدد زخمی

امریکہ کے جنوبی ساحلی علاقوں میں طوفا نی بارشوں اور تیز ہواؤں کے باعث مختلف …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons