چینی نمائندے کی سری لنکا کے داخلی امور میں مداخلت کے خلاف انسانی حقوق کونسل میں تقریر

پچیس تاریخ کو، جنیوا میں اقوام متحدہ کے دفتر اور سوئٹزرلینڈ میں دیگر بین الاقوامی تنظیموں کے لئے چین کے مستقل نمائندے چھن شو نے سری لنکا کے بارے میں اقوام متحدہ کی انسانی حقوق کونسل کے 46ویں اجلاس کے ایک مذاکرے میں تقریر کرتے ہوئے انسانی حقوق کے فروغ اور تحفظ کے سلسلے میں سری لنکا کی حکومت کی فعال طور پر تعریف کی اور سری لنکا کے داخلی معاملات میں بیرونی مداخلت کی مخالفت کی۔

چھن شو نے کہا کہ چین ہمیشہ ہی سے انسانی حقوق کے امور پر سیاست کرنے اور دوہرے معیارات اپنانے کی مخالفت کرتا ہے، نیز انسانی حقوق کے امور کے بہانے دوسرے ممالک کے اندرونی معاملات میں مداخلت کی بھی مخالفت کرتا ہے۔

ہمیں تشویش ہے کہ اس اجلاس میں انسانی حقوق کے امور کے حوالے سے ہائی کمیشنر کے دفتر یعنی او ایچ سی ایچ آر کی طرف سے سری لنکا سے متعلق جو رپورٹ پیش کی گئی ہے اس میں واضح طور پر جانب دارانہ رویہ اپنا یا گیا ہے، اور ہمیں افسوس ہے کہ او ایچ سی ایچ آر نے سری لنکن حکومت کی طرف سے مستند معلومات حاصل نہیں کیں۔

ہائی کمشنر کے دفتر نے “احتیاطی مداخلت” اور ٹارکٹنگ  پابندی کی جو تجویز پیش کی ہے، واضح طور پر سری لنکا کے داخلی امور میں مداخلت کے مترادف ہے اور ہائی کمشنر کے دفتر کے اختیار سے متجاوز ہے۔

ہم امید کرتے ہیں کہ انسانی حقوق کونسل اور ہائی کمشنر کا دفتر تمام ممالک کی خودمختاری اور سیاسی آزادی کا احترام کرے گا، انسانی حقوق کے فروغ اور تحفظ کے لئے تمام ممالک کی کوششوں کو خلوص کی نظر سے دیکھے گا، اور تعمیری مکالمے اور تعاون کی حمایت کرے گا اور مختلف ممالک کے داخلی معاملات میں مداخلت کرنے اور سیاسی دباؤ ڈالنے کے عمل کو ترک کرے گا۔

یہ خبر پڑھیئے

پاکستان سپر لیگ 6 کے باقی میچز کا شیڈول جاری کر دیا گیا

پاکستان سپر لیگ 6 کے باقی میچز کا شیڈول جاری کر دیا گیا

پاکستان سپر لیگ 6 کے باقی میچز کا شیڈول جاری کر دیا گیا ہے۔ شیڈول …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons