فرانسیسی صدر ایمانوئیل میکرون ‘انتہا پسندی’ کو ہوا دے رہے ہیں، ایران

ایران نے فرانس میں گستاخانہ خاکوں کی اشاعت کے معاملے پر کہا ہے کہ فرانسیسی صدر ایمانوئیل میکرون ‘انتہا پسندی’ کو ہوا دے رہے ہیں۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق ایران کے وزیر خارجہ محمد جواد ظریف نے اپنے  ٹوئٹ میں کہا کہ ‘نوآبادیاتی حکومتوں کے ذریعے بااختیار ہونے والے مسلمانوں کو اپنی ‘نفرت’ کا بنیادی شکار بناتے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ آزادی اظہار رائے کی آڑ میں ایک ارب 90 کروڑ مسلمانوں اور ان کی حرمت کی توہین کی گئی جس سے صرف انتہا پسندی کو تقویت ملے گی۔

دوسری جانب گستاخانہ خاکوں کی اشاعت کے خلاف بغداد میں فرانسیسی سفارت خانے کے باہر سیکڑوں افراد نے احتجاج کیا۔ ریلی کے نگراں اور عالم عقیل القدیمی نے فرانس کے صدر سے مسلمانوں سے معافی مانگنے کا مطالبہ کیا۔ انہوں نے کہا کہ ‘ہم ایمانوئیل میکرون کے گستاخانہ خاکوں کی حمایت میں تبصروں کی مذمت کرتے ہیں’۔

یہ خبر پڑھیئے

دنیا میں کرونا کے 4 کروڑ 39 لاکھ 80 ہزار مریض صحتیاب

دنیا میں کرونا کے 4 کروڑ 39 لاکھ 80 ہزار مریض صحتیاب

عالمی وباء کرونا وائرس کے سبب دنیا میں 6 کروڑ 35 لاکھ 84 ہزار سے …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons