تازہ ترین

پاکستان میں مقیم افغان مہاجرین کے لئے چینی عطیات

چین نے نوول کرونا وائرس کی وباء کے باعث پاکستان کے مختلف کیمپوں میں محصور افغان مہاجرین کیلئے خوراک کے 1500 پیکٹ عطیہ کئے ہیں۔

پاکستان میں تعینات چینی سفیر یاؤ چِنگ نے وزیر مملکت برائے سرحدی امور و انسداد منشیات شہریار آفریدی سے ملاقات کے دوران مذکورہ پیکٹس ان کے حوالے کئے۔ یہ عطیہ وزیر مملکت شہریار آفریدی کی درخواست پر دیا گیا، جنہوں نے اقوام متحدہ اور وفاقی دارالحکومت میں قائم سفارتی مشنز کو ارسال کئے گئے خطوط میں اس امر پر زور دیا تھا کہ وہ لاک ڈاؤن کی صورتحال میں محصورافغان مہاجرین کی مدد کریں۔

ملاقات کے دوران چینی سفیر نے وزیر اعظم عمران خان کی جانب سے علاقائی اور عالمی سطح پر امن و امان کیلئے اٹھائے گئے اقدامات کی تعریف کی۔ انہوں نے کہا کہ افغان مہاجرین کی مدد کیلئے پاکستان کے کردار کو طویل عرصے تک یاد رکھا جائے گا۔ چینی سفیر نے کہا کہ پاکستان گزشتہ 4 دہائیوں سے نہ صرف لاکھوں افغان شہریوں کی فراخ دلی سے میزبانی کر رہا ہے ، بلکہ جنگ سے متاثرہ افغانستان میں امن و استحکام کیلئے بھی کلیدی کردار ادا کررہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان کے نمایاں کردار کی وجہ سے  افغانستان میں قیام  امن کے عمل میں پیشرفت جاری ہے،جو افغان عوام کے مستقبل کی تشکیل نو کرے گی۔ اس موقع پر وزیر مملکت برائے سرحدی امور و انسداد منشیات شہریار آفریدی نے کہا کہ چین ہمیشہ سے مشکلات میں گھری انسانیت کی مدد کرتا رہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ چین نے جس طرح عالمی ادارہ صحت اور دیگر اہم عالمی اقدامات کی حمایت کی ہے وہ دنیا کیلئے ایک نمونہ ہے۔ وزیر مملکت نے کہا کہ چین اور پاکستان کی دوستی اچھی ہمسائیگی اور دوستی کی بہترین مثال بن چکی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ چین نے جس طرح نوول کرونا وائرس نمونیا کی وباء کا مقابلہ کیا، وہ پوری دنیا کیلئے ایک مثال ہے۔

یہ بھی چیک کریں

blank

آئی سی سی کی بھارت کو ورلڈ کپ میزبانی واپس لینے کی دھمکی

 بھارت کو آئندہ سال ٹی ٹوینٹی ورلڈ کپ کی میزبانی بچانے کے لالے پڑ گئے، …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons