تازہ ترین
چینی صدر کے حالیہ دورہ 'زے جیانگ' کا بنیادی مقصد طرز حکمرانی کو جدید تقاضوں سے ہم آہنگ کرنا ہے، سی آر آئی کا تبصرہ

چینی صدر کے حالیہ دورہ ‘زے جیانگ’ کا بنیادی مقصد طرز حکمرانی کو جدید تقاضوں سے ہم آہنگ کرنا ہے، سی آر آئی کا تبصرہ

چین کے صدر شی چن پھنگ نے اپنے حالیہ دورہ زے جیانگ کے دوران اس بات پر زور دیا کہ فی الحال وبا کی روک تھام کے لئے جاری احتیاطی تدابیر اور اقدامات میں کمی نہ لائی جائے،عوامی مقامات پر اجتماعات نہ کئے جائیں۔ صدر شی چن پھنگ نے زور دیا کہ وبا پر کنٹرول کے ساتھ ساتھ سماجی و اقتصادی ترقی کو بھی یقینی بنایا جائے۔

اس حوالے سے سی آر آئی کے تبصرے میں کہا گیا کہ چین کے حالات حاضرہ سے دلچسپی رکھنے والے یہ بخوبی جانتے ہیں کہ چین میں ایک جملہ تواتر کے ساتھ استعمال ہوتا ہے اور وہ یہ ہے کہ عہد حاضر کے تقاضوں کے مطابق ملک کے نظم وضبط کے نظام اور ملک کی انتظامی صلاحیتوں کو جدید بنایا جائے۔ گزشتہ سال اکتوبر میں، چینی کمیونسٹ پارٹی کی 19 ویں مرکزی کمیٹی کے چوتھے کل رکنی اجلاس میں ملک کے نظم و نسق کے نظام کو جدید بنانے اور حکمرانی کی صلاحیتوں کو فروغ دینے کے اہداف اور راستے کا واضح خاکہ پیش کیا گیا تھا۔

اجلاس میں ، شی چن پھنگ نے نشاندہی کی، “قومی نظام اور نظم و نسق کے نظام کی تعمیر کے لئے ہم نے جو اہداف طے کیے ہیں وہ اس وقت آگے بڑھیں گے جب عملی طور پر ترقی ہوگی۔” یہ اہم بات انسانی معاشرتی نظام کی ترقی کے قوانین کے حوالے سے چینی قیادت کی گہری بصیرت کی عکاسی کرتی ہے۔ وبا کی روک تھام کے ساتھ ساتھ کاروباری سرگرمیوں کی بحالی اور پیداوار میں تیزی سے اضافے کے موجودہ خصوصی دور میں ، شی چن پھنگ کے زے جیانگ کے معائنہ کے دوران مقامی کاونٹیوں اور مقامی مصالحتی اداروں کا دورہ کیا۔ جس نے بلاشبہ عوام پر مبنی “چین کی حکمرانی” کے تصور کو ایک نئی قوت محرکہ فراہم کی ہے۔

یہ بھی چیک کریں

پاکستان بھارتی جارحیت کا منہ توڑ جواب دینے کیلئے تیار ہے،معید یوسف

پاکستان بھارتی جارحیت کا منہ توڑ جواب دینے کیلئے تیار ہے،معید یوسف

قومی سلامتی کے بارے میں وزیراعظم کے معاون خصوصی ڈاکٹر معید یوسف نے کہا ہے …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons