سی پیک منصوبہ دونوں ملکوں کے درمیان شراکت داری کا ثبوت ہے، وزیراعظم

سی پیک منصوبہ دونوں ملکوں کے درمیان شراکت داری کا ثبوت ہے، وزیراعظم

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ چین پاکستان اقتصادی راہداری منصوبہ دونوں ملکوں کے درمیان کثیرالجہتی شراکت داری کا منہ بولتا ثبوت ہے۔

اسلام آباد میں ترقیاتی منصوبوں میں پیشرفت کے جائزہ اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے انہوں نے کہاکہ چین پاکستان اقتصادی راہداری کے تحت جاری ترقیاتی منصوبے تیز رفتار بنیادوں پر مکمل کئے جانے چاہئیں۔

وزیراعظم نے کہاکہ اس سلسلے کے آئندہ منصوبوں کو ترجیحی بنیادوں پر مشاورتی عمل کے ذریعے حتمی شکل دی جانی چاہیئے۔ انہوں نے مزید کہاکہ سماجی شعبے خصوصاً غربت کے خاتمے اور زراعت کے فروغ کے شعبوں میں چین کے تجربات سے بھرپور فائدہ اٹھایا جانا چاہیئے۔

وزیراعظم نے سی پیک اتھارٹی کو ہدایت کی کہ راہداری کے دوسرے مرحلے کے تحت مختلف منصوبوں پرعملدرآمدکی رفتارتیز کی جائے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ترقیاتی منصوبوں کے آئندہ اجلاس میں ان منصوبوں کی تکمیل کے لئے درکارمدت، درپیش رکاوٹوں اور مستقبل کے لائحہ عمل کے حوالے سے انہیں بریفنگ دی جائے۔

اجلاس کے شرکاء کو چین پاکستان اقتصادی راہداری کے پہلے مرحلے میں توانائی، شاہراہوں، ریلوے نیٹ ورک کے شعبوں اور گوادرپورٹ اور راہداری کے دوسرے مرحلے کے منصوبوں سے آگاہ کیا گیا۔ اجلاس میں بتایا گیا کہ توانائی اور شاہراہوں کے نیٹ ورک کے شعبوں میں زیادہ ترمنصوبے مکمل کرلئے گئے ہیں جبکہ گوادر پورٹ اور ایئرپورٹ کے منصوبوں پر مرحلہ وار کام جاری ہے۔

یہ خبر پڑھیئے

امریکی سینیٹرز کا بھارت کو بدترین ممالک میں شامل کرنے کا مطالبہ

امریکی سینیٹرز کا بھارت کو بدترین ممالک میں شامل کرنے کا مطالبہ

امریکہ کے 14 سینیٹرز نے وزیر خارجہ مائیک پومپو کے نام ارسال کردہ خط میں …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons