کورونا وائرس کے مریضوں کےعلاج میں طبی عملہ ہمہ تن مصروف

کورونا وائرس کے مریضوں کےعلاج میں طبی عملہ ہمہ تن مصروف

نئی قسم کے کورونا وائرس کے نمونیا کی روک تھام اور مریضوں کے علاج کی مہم میں ڈاکٹروں اور طبی کارکنوں کی بڑی تعداد مصروف ہو رہی ہے۔

چین کے مختلف علاقوں کے طبی کارکن بھی جشن بہار کی چھٹیاں ترک کر کے اس وبائی مرض سے شدید متاثر ہونے والے صوبہ ووہان پہنچ گئے ہیں۔

ایک اور اطلاع کے مطابق جرمنی کے کورونا وائرس کے ایک ماہر رالف ہلجین فیلڈ حال ہی میں دو دوائیں ساتھ لے کر چین پہنچے ہیں۔ انہوں نے چائنا میڈیا گروپ کے نامہ نگار کو ایک تحریری انٹرویو میں کہا ہے کہ جب کافی لوگ اپنی جسم میں اینٹی باڈیز تیار کرتے ہیں تو کورونا وائرس خود کو محدود کرتا ہے۔ اس طرح وائرس کے پھیلاؤ کو محدود اور وبا کو ختم کیا جاسکتا ہے۔

یہ خبر پڑھیئے

اسرائیل غیر قانونی قید خانے بند اور ان میں موجود فلسطینیوں کو رہا کرے، اقوام متحدہ

مقبوضہ فلسطین میں اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کے رپورٹر مائیکل لنک نے مطالبہ کیا …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons