blank

چین پاکستان آزادتجارت معاہدے کے دوسرے مرحلے پرعملدرآمد کا آغاز

چین پاکستان آزاد تجارتی معاہدے کے دوسرے مرحلے پرعملدرآمد شروع ہوگیا ہے جس کے تحت پاکستانی مینوفیکچررز اور تاجر تین سو سے زائد مصنوعات چین کی منڈی میں برآمد کرسکیں گے جنہیں ٹیکسوں سے استثنیٰ حاصل ہوگا۔

دونوں ممالک نے معاہدے پرعملدرآمد شروع کرنے کے لئے تمام قانونی طریقہ کار اور شرائط مکمل کرلی ہیں۔ پاکستان اورچین نے وزیراعظم عمران خان کے چین کے گزشتہ دورے کے دوران معاہدے پر عملدرآمد کے لئے ایک سمجھوتے پردستخط کئے تھے۔ پاکستان کو پہلے آزاد تجارتی معاہدے کے تحت چین کوبرآمد کی جانے والی 724 مصنوعات پر پہلے ہی ٹیکسوں سے استثنیٰ حاصل ہے دونوں ملکوں کے درمیان اس معاہدے پر2006ء میں دستخط کئے گئے تھے۔

یہ بھی چیک کریں

آئی ایم ایف کی مالی سال 2021 میں پاکستان کی معیشت کی بحالی کی پیشگوئی

آئی ایم ایف کی مالی سال 2021 میں پاکستان کی معیشت کی بحالی کی پیشگوئی

بین الاقوامی مالیاتی فنڈ نے مالی سال دوہزار اکیس کےدوران پاکستان کی معیشت میں بحالی …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons