چینی صدر کا عوامی فلاحی پروگرام "امید" کے نام پیغام

چینی صدر کا عوامی فلاحی پروگرام ”امید“ کے نام پیغام

چینی صدر شی چن پھنگ نے چین میں عوامی فلاح وبہبود کے پروگرام ”امید“ کی 30ویں سالگرہ کے موقع پر پیغام ارسال کیا ہے۔

چینی صدر نے اپنے پیغام میں اس بات پر زور دیا کہ بنیادی تعلیمی نظام اور دیہی علاقوں سے تعلق رکھنے والے طلبہ کو تعلیم فراہم کرنے کے لئے پروگرام کو مزید بہتر بنایا جائے۔

غربت سے نجات دلانے، تعلیم کو فروغ دینے، نوجوانوں کی نشوونما اور معاشرتی اخلاقیات کی تشکیل میں اس پروگرام امید کے اہم کردار کے حوالے سے صدر مملکت نے کہا کہ پچھلے 30 سالوں میں، پروجیکٹ ”امید“ نے غریب گھرانوں کے لاکھوں نوجوانوں کو اسکول جانے اور ہر لحاظ سے معاشرے کا ایک اہم ستون بننے کے خواب کو سمجھنے میں راہ ہموار کی ہے۔

اس بات پر زور دیتے ہوئے کہ قوم اور عوام کا مستقبل نوجوانوں کی صحت مند نشوونما پر منحصر ہے ، صدر شی نے چینی کمیونسٹ یوتھ لیگ (سی سی وائی ایل) کی تنظیموں کو تاکید کی کہ پروگرام کے بہتر فروغ کے لئے، نئے دور میں نوجوان نسل کی زیادہ سے زیادہ امداد اور رہنمائی کی جائے۔

صدر شی نے کہا کہ پوری کمیونسٹ پارٹی اور معاشرے کو پروجیکٹ ‘امید’ پر دھیان دیناچاہیئے اور اس کی حمایت جاری رکھنی چاہیئے تاکہ نوجوان، پارٹی سمیت ایک بڑے سوشلسٹ نظام کی اہمیت کو پوری طرح محسوس کرسکیں اور سوشلسٹ مقصد میں شامل ہونے کے لئے پوری طرح تیار رہیں۔

یاد رہے کہ پروجیکٹ ”امید“ کا آغاز 1989ء میں سی سی وائی ایل سنٹرل کمیٹی اور چائنہ یوتھ ڈویلپمنٹ فاؤنڈیشن نے کیا تھا۔ ستمبر 2019 تک، اسے عطیات کی مد میں 15.2 بلین یوآن (تقریبا 2. 2.16 بلین امریکی ڈالر) مل چکے تھے، اس پروگرام تحت مالی مشکلات کے حل کے لئے تقریبا 6 ملین سے زائد طلباء کی امداد کی گئی اور 20،195 پرائمری اسکول بنائے گئے۔

یہ خبر پڑھیئے

پاکستان کو فلاحی ریاست بنانا ہے، وزیراعظم

پاکستان کو فلاحی ریاست بنانا ہے، وزیراعظم

وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ اُن کا مقصد اور نظریہ پاکستان کو فلاحی …

اپنا تبصرہ بھیجیں

Show Buttons
Hide Buttons