بانو قدسیہ کا 91 واں یوم پیدائش آج منایا جا رہا ہے

بانو قدسیہ کا 91 واں یوم پیدائش آج منایا جا رہا ہے

آج اردو کی مشہور ناول نویس، افسانہ نگار اور ڈرامہ نگار بانو قدسیہ کا 91 واں یوم پیدائش ہے۔ اردو ادب کی شاہکار تصنیف ’راجہ گدھ‘ اور دیگر بے شمار لازوال تصانیف کی خالق بانو قدسیہ 3 سال قبل خالق حقیقی سے جا ملی تھیں۔

بانو قدسیہ 28 نومبر 1928ء کو بھارت کے مشرقی پنجاب کے ضلع فیروزپور میں پیدا ہوئیں، انہوں نے 27 ناول اور کہانیاں تحریر کی ہیں جس میں ’’راجہ گدھ‘‘، ’’امربیل‘‘، ’’بازگشت‘‘، ’’آدھی بات‘‘، ’’دوسرا دروازہ‘‘، ’’تمثیل‘‘،’’ حاصل گھاٹ‘‘ اور ’’توجہ کی طالب ‘‘ قابل ذکر ہیں جب کہ ان کے ناول ’’راجہ گدھ‘‘اور ’’آدھی بات‘‘ کو کلاسک کا درجہ حاصل ہے۔ اس کے علاوہ انہوں نے ریڈیو اور ٹیلی ویژن کے لئے بھی بہت سے ڈرامے لکھے ہیں۔
بانو قدسیہ کی ادب کے شعبے میں گراں قدر خدمات پر حکومت پاکستان کی جانب سے انہیں ستارہ امتیاز اور ہلال امتیاز سے نوازا گیا۔ وہ 4 فروری 2017ء کو اپنے خالق حقیقی سے جا ملیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں