آئین شکنی کیس، جنرل مشرف کو5 دسمبر تک بیان ریکارڈ کرانے کا حکم

آئین شکنی کیس، جنرل مشرف کو5 دسمبر تک بیان ریکارڈ کرانے کا حکم

اسلام آباد کی خصوصی عدالت نے آئین شکنی کیس میں سابق صدر جنرل ریٹائرڈ پرویز مشرف کو 5 دسمبر تک بیان ریکارڈ کرانے کا حکم دے دیا ہے۔

خصوصی عدالت کے جج جسٹس وقار احمد سیٹھ نے ریمارکس دیتے ہوئے کہا کہ ہم ہائی کورٹ کے فیصلے پر کوئی تبصرہ نہیں کریں گے۔جسٹس شاہد کریم نے ریمارکس دیئے کہ ہم صرف سپریم کورٹ کے احکامات کے پابند ہیں۔ عدالت نے کیس کی سماعت 5 دسمبرتک ملتوی کرتے ہوئے ہدایت کی کہ 5 دسمبرکو پراسیکیویشن ٹیم پوری تیاری کے ساتھ پیش ہو، اس کے بعد التواء نہیں دیں گے، پرویز مشرف 5 دسمبر سے قبل کسی بھی دن اپنا بیان ریکارڈ کراسکتے ہیں۔

اپنا تبصرہ بھیجیں